Story of Jack Ma in Urdu

علی بابا کے شریک بانی نے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا. کامیابی کی ایک کہانی

پاکستان ٹیکنالوجی

ان لائن بزنس اور ان لائن ارننگ میں جیک ما کی کہانی سب سے مختلف ہے کیونکہ جیک ماہ کی کامیابی کا اتنا بڑا سفر 19 سال میں طے ہوا ہے، ایک ایسے وقت اورحالات میں جب جیک ما ایک سال کے امتحان میں چار سال فیل ہوتا رہا اور 33 سال کی عمر میں کمپیوٹر پہلی بارخریدا لیکن آج موصوف ان لائن شاپنگ اور ای بزنس کے دنیا کا سب سے بڑا نام بن چکا ہے.

ہمیں امید ہے زندگی کے ہر میدان میں کامیابی کے خواہشمند اور ان لائن دنیا میں نام پیسہ اور کامیابی کے بارے میں سوچنے والے اس ارٹیکل کو اخرتک پڑھیں گے.




کامیابی کی پوری کہانی سنانے سے پہلے یہ اج کی خبر ہے کہ ای کامرس اور ان لائن خریداری کی دنیا میں انقلاب انگیز چینی کمپنی علی بابا گروپ ( Alibaba Group ) کے شریک بانی اور ایگزیکٹیو چئیرمین جیک ما ( Jack Ma ) نے ریٹائرمنت کا اعلان کردیا.

امریکی اخبار نیویارک ٹائمز کو انٹرویو کے دوران علی بابا کے شریک بانی جیک ما نے کہا کہ وہ اپنی باقی زندگی انسانیت کے فلاح وبہبود کے لئے وقف کرنا چاہتا ہے اور یہ میرے کیرئیر کا اختتام نہیں بلکہ ایک نیا آغاز ہورہاہے.

جیک ما جو کہ چین کے امیر ترین افراد کے فہرست میں تیسری نمبر پر ہے، کے مطابق 1999 میں ان لائن خریداری کی عظیم الشان کمپنی علی بابا کے قیام سے پہلے وہ انگریزی زبان کے استاد تھے لیکن انٹرنٹ کی دنیا پر انے والے مواقع کے بارے میں بہتر اندازہ لگاکر موصوف نے درس وتدریس کا شعبہ چھوڑ کر ایک نئی دنیا کی تلاش شروع کی.

انگریزی زبان سیکھنے کا شوق انہیں اپنے شہر میں انے والے انگریز سیاحوں کیساتھ وقت گزارنے اور گفتگو کے دوران ہوا جب جیک ما ابھی طالب علم تھے. بطور طالب علم وہ انگریز سیاحوں کے لئے گائیڈ کا کام بھی کرتے رہے لیکن وہ اس کام کا کوئی معاوضہ نہیں لیتے تھے کیونکہ انگریزی زبان سیکھنے میں جیک کی بے حد دلچسپی تھی.
اس مقصد کی حصول کے لئے وہ اپنی سائیکل پر مسلسل 9 سال تک 70 کلومیٹر دور دور تک انگریز سیاحوں کیساتھ سفرکرتےاور انگریزی میں ان کے ساتھ گفتگو کرکے انہیں مختلف علاقوں کے بارے میں بتاتے.

جیک ما کی انگریزی بول چال اور استعداد میں اضافہ ضرور ہوا لیکن پڑھائی میں وہ بہت پھیچے رہے کیونکہ ریکارڈ کے مطابق صرف انٹر پاس کرنے میں انہیں چار سال لگے جبکہ چائنہ میں انٹر صرف ایک سال کا اور فیل ہونے کا چانس بہت کم ہوتا ہے لیکن جیک کی انگریزی کی شوق نے انہیں یہ دن بھی دیکھانا پڑے.

1988 میں اپنی شہر کی یونیورسٹی سے انگلش میں بی اے کیا اور مقامی کالج میں درس وتدریس کے شعبے سے وابستہ ہوگئے لیکن اس سے پہلے وہ ملازمت کے تیس 30 موقعوں پر انٹرویو دیکر مستردکردئے گئے تھے. جیک نے ایک انٹرویو کے دوران چارلی روز کے سامنے انکشاف کیا تھا کہ وہ کے ایف سی ہوٹل میں بھی ملازمت کے حصول کے لئے گیا لیکن وہاں بھی مسترد ہوا تھا.

اور یہ 1994 کی بات ہے جب جیک ما نے انٹرنٹ کے متعلق سنا لیکن انٹرنٹ سے پہلا واسطہ تب ہوا جب اگلے سال 1995 میں وہ اپنے دوستوں کیساتھ امریکہ گیا تو معلوم ہوا کہ انٹرنیٹ پر مختلف اقسام کے شراب کے بارے میں تو بہت کچھ مل سکتا ہے لیکن چائنہ جیسے بڑے ملک اور قوم کے بارے میں بلکل معلومات نہیں تو جیک اور دوستوں نے فیصلہ کیا کہ چین کے متعلق ویب سائٹ بنایا جائے.
ایک بدنما قسم کی ویب سائٹ بناکر لانچ کی تو صرف تین گھنٹے کے اندر اُسے چینی سرمایہ کاروں کی ایک ای میل موصول ہوئی جو اسکے بارے میں جاننا چاہتے تھے.

عین اسی موقع پر جیک کو اندازہ ہوا کہ انٹرنٹ پر اُس کے لئے بہت مواقع موجود ہیں. جیک ماہ ، اسکی بیوی کیتھی اور دوست نے 20.000 ہزار ڈآلرز کی ابتدائی سرمایہ کاری سے China Pages کے نام سے کمپنی قائم کی جو دوسری کمپنیوں کے لئے ویب سائٹس بنانے کا کام کرتی تھی. صرف تین سال میں اس کمپنی نے 800،000 اٹھ لاکھ امریکی ڈالرز بنائے جو جیک کے لئے ایک خطیر رقم تھی .

اُنکی کمپنی سے ویب سائٹس بنوالے والے زیادہ تر چینی کمپنیاں ہی تھے اور جیک ما کی کمپنی تمام ویب سائٹس اپنے امریکی دوستوں سے بنواتے کیونکہ اسے کمپیوٹر اور اسکے متعلقہ علم کا کوئی شُدبُد نہیں تھا. خود جیک کا کہنا ہے کہ اس نے 33 سال کی عمر پہلی بار کمپیوٹر خریدی تھی.




جیک ما 1999 میں اپنی ٹیم کے ساتھ اپنے ابائی شہر واپس ائے، ای کامرس کی اس عظیم انقلابی کمپنی Alibaba کے آغاز کے لئے اپنے 18 دوستوں کی مدد سے اپنے گھر سے ہی کام شروع کیا اورپھر وقت نے ثابت کردیا کہ جیک ما کے تخلیقی اور کاروباری زہن نے ان لائن کاروبار کے زریعے صرف ایک دہائی میں وہ نام کمایا کہ بڑے بڑے حیران رہ گئے.

جیک ما کی Alibaba ماڈل نے دنیا بھر سے سرمایہ کاروں سے اپنی طرف متوجہ کیا اور صرف دوسال کے اندر اندر Alibaba میں 50 ارب امریکی ڈالرز کی سرمایہ کاری ہوئی. جیک ما آج صرف Alibaba کا نہیں بلکہ Taobao Marketplace, Alipay, Ali Mama اور Lynx جیسے بڑی بڑی کمپنیوں کے مالک اور ورلڈ ٹریڈ ارگنائزیشن کے سات مل کر عالمی کاروباری ترقی کے لئے خدمات سرانجام دے رہاہے.




جیک ماہ نے 9 جنوری 2017 کو امریکی صدر ٹرمپ سے ٹرمپ ٹآور میں ایک لمبی ملاقات اسلئے کی تاکہ ٹرمپ کو سیکھایا جائے کہ کس طرح اگے پانچ سالوں میں امریکیوں کے لئے روزگار کے دس لاکھ مواقع پیدا کئے جائے، اس سے اپ جیک ما کی کاروباری اور کامیابی کی صلاحیتوں کا اندازہ لگاسکتے ہیں.

آج جیک ما کی کل ذاتی دولت اس وقت 36.6 امریکی ڈآلرز ہیں اور علی بابا کمپنی کی کل مالیت آج کی تاریخ میں 420.8 امریکی ڈآلرز ہیں.

جیک ماہ اج 10 ستمبر کو 54 سال کے ہوجائے گے کیونکہ وہ اسی تاریخ کو 1964 میں چین کے شہر ہانگ زو میں پیداہوئے تھے. جیک شادی شدہ . دو بچوں کے باپ اور2017 ایک فلم میں بطور اداکار بھی کام کرچکا ہے.





Urdu Story Of Jack Ma, The Co Founder and CEO of World Best Online Shopping Company Alibaba Group. How Jack Ma Founded Alibaba Group and how he got success in online Marketing while he has no knowledge and basic skills of Computer. The Urdu Story of Jack Ma and Alibaba Group by Updated Pakistan

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے