لکی مروت میں ” بچہ بازی ” یا "چوکرا بازی "کی لعنت

پاکستان تاریخ

یہ ارٹیکل شیر محمد خان مہمند کی کتاب ” دی مروت” کے ایک اقتباس کا اردوترجمہ ہے جو ” برمزیدڈاٹ کام ” ویب سائٹ پرشائع شدہ ہے . مطبوعہ 1999، صفحات 90،91،

( بچہ بازی جسے مختلف علاقائی زبانوں اور لہجوں میں منڈا بازی، چوکرا بازی اور "ھلک بازی ” یا لونڈا بازی بھی کہا جاتا ہے. اس شوق کا مطلب بڑے عمر کے بالغ مردوں کا کم سن لڑکوں( چھوکروں ) سے جنسی شہوت پورا کرنے کے علاوہ دوستی، عشق نامراد ، رقص وگانے کی خواہش یا رومانوی جسمانی تعلق رکھنا جیسے کہ چھومنا ، ہاتھ ہاتھ میں لیکر گھومنا پھرنا، مس کرنا شامل ہیں. ایڈیٹر).

” مروت کچھ اپنے سماجی جبلت ( عادتوں کی پختگی ) اورکچھ اپنے ماحول کی وجہ سے عشق نامراد یعنی بچہ بازی ( چھوکرابازی ) کی طرف مائل ہیں. بنوں کی طرح لکی مروت میں بھی خوبصورت اور دلرُبا کمسن لڑکوں سے محبت مردوں کا ایک مرغوب اور پسندیدہ مشغلہ ہے.
یہ خوبصورت لڑکے جو اپنے اردگرد اپنے چاہنے والوں کے حلقے سے اچھی طرح واقف ہوتے ہیں، مخصوص عادات واطوار کے حامل ہوتے ہیں جیسے کہ وہ کندھوں کے اوپر تک لمبے بال رکھتے ہیں، ہونٹوں کی خوبصورتی کے لئے دنداسے کا استعمال، انکھوں میں سرمے کااستعمال اور عام طور پر صاف اور نفیس لباس پہنتے ہیں. یہ زیادہ بڑکیلے اور شوخ تو نہیں البتہ گندے نہیں ہوتے.

یہ خوبصورت لونڈے جانتے ہیں کہ انکا بدمزاج ہونااور نامناسب برتاؤ انکے چاہنے والوں پر منفی اثر ڈال سکتا ہے. ان لڑکوں کے طور طریقے دل رُبا ، چہرے اور جسم کے نقوش نہایت دلکش ہوتے ہیں.



>
ان خوبصورت لڑکوں اور انکے عاشقوں کے درمیان تعلق توڑنے یعنی غمازی کرنے کی کوشش کرنے والے سنگین قسم کے ذاتی دشمنی کا شکار ہوسکتے ہیں. اس معاملے پر قتل مقاتلے کا ہونا ایک عام بات ہے. بچہ بازی کے معاملے میں چاقو یا تیز دھار الے سے وار کرنے یا گولی مارنے کے واقعات اس وقت بھی سامنے اتے ہیں جب یہ خوبصورت لڑکے اپنے چاہنے والے عاشقوں سے بے وفائی کے مرتکب ہوتے ہیں یا ان کے خواہشات کو نظرانداز کرتے ہیں.

بچہ بازی کے ایسے واقعات جس میں کمسن لڑکوں کیساتھ زبردستی بدفعلی کیجاتی ہے، اسکا کریمنل عدالتوں میں بہت کم مقدمات چلتے ہیں یا ریکارڈ ہوتا ہے کیونکہ فریقین بھاری رقم کے لے دے سے معاملات طے کرتے ہیں ( یعنی جس کے ساتھ زیادتی ہوچکی ہوتی ہے، اسے بھاری رقم دیکر معاملہ رفع دفع کیا جاتا ہے ) کیونکہ وہ جانتے ہیں کہ یہ معاملہ عدالتوں میں جانے سے فریقین اور مجرمان کو اسلامی حدود قوانین کے تحت سنگین اور عبرناک سزاؤں کا سامنا کرنا پڑیگا.

جبکہ باہمی رضامندی سے ہونے والے بچہ بازی ( ہم جنس پرستی ) کے واقعات بے شمار ہوسکتے ہیں. بعض بچے بھیک مانگنا شروع کرتے ہیں تو دوسرے پیشہ وارنہ رقص ( ڈانسنگ ) کی طرف جاتے ہیں. رقص کرنے والے یہ پیشہ ور خوبصورت لڑکے مروت کے علاقے میں ہونے والے تقریبات میں اہتمام کیساتھ بلائے جاتے ہیں جہاں یہ اپنے صلاحیت اور فن کے جانداروشاندار مظاہرے کیساتھ لوگوں کی تفریح کا باعث بنتے ہیں.
اپنے جسم کو توازن دیکر ڈھول کی تھاپ پر ہاتھ اور پاؤں کی لغزشوں سے ایسے نظارے دیکھنے کو ملتے ہیں کہ دیکھنے والے حضرات نظریں ہٹانا بھول جاتے ہیں. وہ مروت اس موقعے سے بھرپور طور پر لطف اندوز ہوسکتے ہیں جو ان لڑکوں کے ہاتھ میں کرنسی نوٹ دیتے ہیں یا نچھاور کرتے ہیں.



مروت قبیلے کے بعض خان بھی خفیہ طورپر ان کمسن اور خوبصورت لڑکوں سے وقت گزاری کرتے ہیں لیکن یہ خالص غیرجسمانی عشق نامراد ہوتا ہے. البتہ ایسے حضرات بھی موجود ہیں جو اس بات پر بہت کم یقین رکھتے ہیں کہ مروت بطورمجموعی خوبصورت لڑکوں Lads (چھوکرے) سے خالص محبت کرتے ہیں. ہوسکتا ہے کچھ لوگ ہو جو جسمانی تعلق کے بغیر رومانوی جزبہ کیساتھ خوبصورت لڑکوں سے محبت کا روگ پالتے ہو لیکن انکی تعداد بہت کم ہوگی.

جو بھی ہو لیکن اس حقیقت سے انکار ممکن نہیں کہ ناچنے والے لڑکے (Dancing Boys) مروت تہذیب کا ایک اہم حصہ بن چکے ہیں جو ناچنے والے لڑکیوں کے متبادل ہیں کیونکہ مروت لوگ کھلے عام عوامی جگہوں پر لڑکیوں کے رقص کے سخت خلاف ہیں. تاریخی طور پر بھی مروت ثقافت میں لڑکیوں کی رقص کی کوئی نظیر نہیں ملتی اور ” مجرا ” یا” رنڈی” کے الفاظ مروت ثقافت میں عام نہیں.

سرائے مروت کا علاقہ ایسے سرگرمیوں کا مرکز ہے جہاں یہ نوعمرلڑکے رقص کرتے اور گاتے ہیں ( مقامی پشتو میں ڈم کہلاتے ہیں). لفظ
” ویڑکے” یا ” ویڑکائی” کا مطلب خوبصورت لونڈا، چھوکرا، کمسن منڈا ہے جو قریبی علاقے بنوں میں ملک لوگ ذاتی نوکر کے طور پر رکھتے ہیں جو جدید دور کے ایک ذاتی سیکٹری کی طرح ہوتا ہے یا مذید وضاحت کیساتھ کہ یہ جدید دور کے لیڈی پرائیوٹ سیکٹری کا متبادل ہوتا ہے.

یاد دھانی. یہ ارٹیکل انگریزی زبان کے ویب سائیٹ www.barmazid.com پر شائع ہوئی جو یہاں اختصار کیساتھ اردو میں ترجمہ کیا گیا ہے.

بچہ( چھوکرا ) اور اسکے مداح، ازبکستان 1868۔ فوٹو Vasily Vereshchagin




Tags. Bacha Bazi, Chokra Bazi, Londa Bazi or Munda Bazi, The Bacha bazi in Lakki Marwat .Updated Pakistan

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے